31

پنجاب حکومت سیلاب  کے خطرے والے  علاقوں میں قائم غیر قانونی ہائوسنگ سوسائٹیوں کے خلاف کارروائی کرے ، وزیراعظم عمران خان

اسلام آباد:وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ گرین ایریاز کو رہائشی اور تجارتی علاقوں میں بدلنے سےاور بغیر منصوبہ بندی  اور غیر منظم شہری پھیلائو سے  فوڈسکیورٹی   متاثر  ہو گی، پنجاب  حکومت سیلاب کے خطرے والےعلاقوں میں قائم غیر قانونی ہائوسنگ سوسائٹیوں کے خلاف کارروائی کرے کیونکہ ایسے علاقوں میں ہائوسنگ  سوسائٹیوں سے عوام کی جانوں اور سرمائے کو نقصان پہنچنے کااندیشہ ہے۔ جمعرات کو وزیراعظم عمران خان نے سنٹرل بزنسن ڈسٹرکٹ( سی بی ڈی ) اور راوی  اربن ڈویلپمنٹ اتھارٹی (آر یو ڈی  اے) کےمنصوبوں پرپیشرفت  کے جائزہ اجلاس کی صدارت کر رہے تھے ۔ اجلاس میں خزانہ شوکت ترین ، وزیرمملکت برائے اطلاعات و نشریات فرخ حببیب، وزیراعظم کے معاون خصوصی ڈاکٹر شہباز گل، چیئرمین نیاپاکستان ہائوسنگ اتھارٹی لیفٹیننٹ جنرل (ر)  انور علی حیدر اور اعلیٰ حکام نے شرکت کی۔ وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار،صوبائی وزیرہائوسنگ ملک اسدکھوکھر ، وزیر بلدیات میاںمحمود الرشید ،وزیراعلیٰ پنجاب کے مشیر ڈاکٹر سلمان شاہ اور اعلیٰ حکام ویڈیو لنک کے ذریعے شریک ہوئے۔ وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ حکومت ماحولیاتی اعتبارسےپائیداراور منصوبہ بندی سے جدید شہروں پرتوجہ دےرہی ہے، ڈیڈ سرمائے کو ریونیو پیداکرنے والے منصوبوںمیں تبدیل کیا جارہا ہے۔ حکومت رہائشی اور تجارتی ضروریات کو پوراکرنے کے ساتھ ساتھ سرسبز علاقوں کے تحفظ کے لئے نئے شہری منصوبوں کے لئے ماحول دوست طریقے اپنا رہی ہے۔ وزیراعظم نے سنٹرل بزنس ڈسٹرکٹ کی ٹیم کی کاوشوں کو سراہتے ہوئےکہا کہ  سی بی ڈی میں 2 کمرشل پلاٹوں کی نیلامی سے 57 ارب 88 کروڑ روپے کا ریکارڈ ریونیو حاصل ہوا۔ انہوں نے کہاکہ حکومت نے ڈیڈ سرمایہ  جو ملک بھر میں استعمال کے بغیر کے پڑا ہے اسے پائیدار ریونیو کے حصول کے اقدامات میں تبدیل کرنے کاہدف مقرر کیاہے۔ انہوں نے پاکستانی تارکین وطن پر زور دیا کہ وہ سنٹرل بزنس ڈسٹرکٹ اور راوی اربن ڈویلپمنٹ اتھارٹی منصوبوں میں محفوظ سرمایہ کاری کے مواقعوں سے فائدہ اٹھائیں۔ انہوں نے پنجاب حکومت  کو ہدایت کی کہ وہ  سیلاب کے خطرے والے علاقوں میں  زمینوں کو فروخت کرنے میں ملوث غیرقانونی ہائوسنگ سوسائٹیوں  کے خلاف قانونی کارروائی کریں  کیونکہ اس سےعوا م کی جانوں اور سرمائے کو نقصان  پہنچنے کا اندیشہ ہے ۔ قبل ازیں اجلاس کو سنٹرل بزنس ڈسٹرکٹ اور راوی اربن ڈویلپمنٹ اتھارٹی منصوبوںپر پیشرفت  کے حوالے سے بریفنگ دی گئی جن میں پہلی ڈائون ٹائون نیلامی ، پاور پلانٹ کی تعمیر، چارباغ ، رکھ، جوک ، قومی پارک، روڈا ڑٹیکنالوجی پارک، اوورسیز پاکستانیوں کے 10 ہزار اپارٹمنٹس ،ویسٹ واٹر ٹریٹمنٹ پلانٹ اور دیگرسہولیات شامل ہیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں