31

وفاقی حکومت اور چیف سیکرٹری گلگت بلتستان کے ویژن کے تحت کام کرنا ہوگا

سکردو (س۔ر) 36 میگاواٹ ہرپوہ پاور پراجیکٹ پر جلدی کام کا آغاز کرکے اس اہمیت کے حامل منصوبے سے بجلی کے بحران پر بہت حد تک قابو پایا جا سکتا ہے ان خیالات کا اظہار کمشنر بلتستان نجیب عالم نے “پی ایس ڈی پی مانیٹرنگ کمیٹی” کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ کمشنر بلتستان نے کہا حکومت پی ایس ڈی پی کے منصوبوں پر ہنگامی بنیادوں پر معیاری کام کے ذریعے عوام الناس کو درپیش مسائل حل کرنے کےلئے سنجیدگی سے کام کر رہی ہے جس کےلئے تشکیل کردہ کمیٹی کے ممبران کو وفاقی حکومت اور چیف سیکرٹری گلگت بلتستان کے ویژن کے تحت دلجمعی سے کام کرنا ہوگا۔ نجیب عالم نے کہا وفاقی حکومت کے میگا منصوبوں کے ثمرات کو عوام تک پہنچانے کےلئے تمام اداروں کو باہمی مشاورت اور تعاون سے آگے بڑھنے کی ضرورت ہے ۔انہوں نے کہا پی ایس ڈی پی منصوبوں پر چیف سیکرٹری گلگت بلتستان گہری دلچسپی رکھتے ہیں اور وہ ان منصوبوں کو معیار کے مطابق بروقت تکمیل تک پہنچانے کے خواہشمند بھی ہیں۔ کمشنر بلتستان نجیب عالم نے کہا بلتستان خاص طور پر سکردو کے عوام پہلے ہی پانی اور بجلی کے سنگین مسائل سے دوچار ہیں ایسے میں پاور کے ان اہم منصوبوں پر ہنگامی بنیادوں پر کام کرنا وقت کا تقاضا ہے۔ اجلاس میں ہرپوہ پاور پراجیکٹ کے پی ڈی، ایکسیئن پاور سکردو، ڈپٹی کمشنر سکردو، ایس ایس پی سکردو، اسسٹنٹ کمشنر روندو شریک تھے جبکہ زوم پر پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ گلگت بلتستان کی میڈم نجمہ نے بھی شرکت کی۔ اجلاس میں 36 میگاواٹ ہرپوہ پاور پراجیکٹ منصوبے پر مختلف زاویوں سے جائزہ لیا گیا اور تمام تر مشکلات اور مسائل سے نبرد آزما ہوتے ہوئے منصوبے پر کام شروع کرنے پر اتفاق کیا گیا ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں