46

خطے کو بحران سے نکالنے اور عوامی حقوق کے حصول کیلئے مشترکہ جدوجہد کرنے پر اتفاق

گلگت (س۔ر(متحدہ اپوزیشن جی بی اسمبلی اور اراکین جی بی کونسل کا مشترکہ اجلاس، خطے کو بحران سے نکالنے اور عوامی حقوق کے حصول کیلئے مشترکہ جدوجہد کرنے پر اتفاق متحدہ اپوزیشن گلگت بلتستان اسمبلی اور گلگت بلتستان کونسل کےاراکین کا ایک اہم اجلاس منعقد ہوا۔ اجلاس میں اپوزیشن لیڈر کاظم میثم، جاوید منوآ اور کونسل اراکین چیرمین قائمہ کمیٹی جی بی کونسل ایوب شاہ، ممبر کونسل شیخ احمد علی نوری ،ممبد کونسل عبدالرحمن اور ممبر کونسل سید شبیہ الحسنین نے شرکت کی۔ اجلاس میں گلگت بلتستان میں جاری گندم بحران اور مالیاتی بحران سمیت عوامی احتجاجات زیرغور آئے اور ان تمام معاملات پر مشترکہ کوشش اور جدوجہد کرنے پر اتفاق کیا گیا۔ صوبائی حکومت کے وزرا کی مایوس کن پریس کانفرنس پر افسوس کا اظہار کیا گیا۔ اجلاس میں کہا گیا کہ ہم اس امید پہ تھے کہ صوبائی حکومت گلگت بلتستان کو گندم کے بحران اور دیگر مالیاتی بحران سے نکالنے کے لیے وفاقی حکومت کے آگے مطالبات رکھیں گے لیکن انہوں نے گلگت بلتستان کے عوام کے مطالبات کو پس پشت ڈال دیا۔ اگر صوبائی حکومت وفاقکے ساتھ مطالبات بھرپور انداز میں اٹھاتے تو ہم انکے ساتھ کھڑے ہوتے، مگر صوبائی حکومت ہر مرحلے پر مصلحت سے کام لیتے ہوئے وفاق کے سامنے گلگت بلتستان کا عوامی مقدمہ کمزور پچ پر لڑ رہی ہے۔ اگلے مہینے سے سرکاری ملازمین کی تنخواہوں کے لئے بھی پیسے نہیں لیکن صوبائی حکومت اس پہ سنجیدگی دیکھانے کی بجائے سب ٹھیک کا راگ الاپ رہی ہے۔ اجلاس میں کہا گیا کہ ہم اپنے عوام کے ساتھ کھڑے ہیں اور عوامی مطالبات کے حل کے لیے صوبائی حکومت کو فوری اقدامات اٹھانے چاہیے۔ ساتھ ہی صوبائی حکومت کی ذمہ داری بنتی ہے کہ وفاق سے اپنے ایشوز حل کرانے کے لیے اقدامات اٹھائے۔ اجلاس میں یہ بھی طے پایا کہ اپوزیشن اور جی بی کونسل حالیہ ایشوز کے حل کے لیے مشاورت سے آگے بڑھے گی اور عوام کے ساتھ کھڑی رہے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں