46

جنگلات کی غیر قانونی کٹائی کے حوالے سے ڈپٹی کمشنر گلگت کو تفصیلی بریفنگ

گلگت۔ ڈپٹی کمشنر / ڈسٹرکٹ مجسٹریٹ گلگت امیر اعظم کی زیر صدارت ایک اہم اجلاس جنگلات کی غیر قانونی کٹائی کے حوالے سے منعقد ہوا۔ اجلاس میں ڈی ایف او گلگت، سکیٹر مجسٹریٹ، ایس ایچ او، RFO گلگت اور دیگر آفیسران نے شرکت کی۔ تفصیلات کے مطابق ڈپٹی کمشنر گلگت نے سوشل میڈ یا پر چلنے والی خبر پر ایکشن لیتے ہوئے محکمہ جنگلات کے ڈی ایف او، آر ایف او اور نومل نلتر تھانے کیایس ایچ او آفس طلب کیا تھا اور ڈپٹی کمشنر گلگت نے کہا کہ نلتر میں غیر قانونی طور پر جنگل کی کٹائی کرنے والے ا فراد کے خلاف سخت سے سخت ایکشن لیا جائیگا اور ان کو جیل کی سزا دی جائیگی۔ جنگلات کی غیر قانونی کٹائی کی روک تھام کے لئے ہر ممکن اقدامات کئے جائینگے۔ ڈی ایف او گلگت نے جنگلات کی غیر قانونی کٹائی کے حوالے سے ڈپٹی کمشنر گلگت کو تفصیلی بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ نلتر کے مقام پر تین افراد نے جنگل کی غیر قانونی کٹائی کرنے والے تین افراد کے خلاف کاروائی عمل میں لا کر جیل کی سزا دی گئی ہے اور محکمہ جنگلات کے اراضی پر لینڈ فافیا کی جانب سے قبضہ کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے سوشل میڈ یا پر چلنے والی خبر کے حوالے سے ڈی ایف او گلگت نے ڈپٹی کمشنر گلگت کو بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ 16 میگاواٹ کے کام کے زد میں آنے والے درختگان کی کٹائی کی گئی ہے سوشل میڈ یا میں چلنے والی خبر کی کوئی صداقت نہیں ہے ان درخت کو آکشن کیا گیا ہے اور قومی خزانہ میں چالان بھی جمع کرائیں ہیں ضلع انتظامیہ گلگت اور محکمہ جنگلات کی جانب سے چیک پوسٹں بھی قائم کی گئی ہیں ایک چیک پوسٹ جی بی سکاؤٹس کی ہے ایک چیک پوسٹ پر محکمہ جنگلات کے اہلکار موجود ہوتے ہیں اور ایک چیک پوسٹ پر رینجر والے تعینات کئے گئے ہیں۔ ڈپٹی کمشنر گلگت نے موقع پر ڈی ایف او گلگت کی نگرانی میں ایک ٹیم تشکیل دی اس ٹیم میں مجسٹریٹ، ایس ایچ او نومل نلتر اور آر ایف او پر مشتمل ہوگی۔ یہ ٹیم جنگل کی غیر قانونی کٹائی میں ملوث افراد کی نشاہدی کرے گی جن کے خلاف قانونی کاروائی عمل میں لا کر جیل کی سزا دی جائیں اور جنگل کی غیر قانونی کٹائی میں ملوث افراد جنتے بھی بااثر ہونگے اُن کو کسی بھی صورت نہیں بخشا جائیگا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں