37

آئنی عہدوں پر تعینات عہداروں کو اب رعایتی گندم فراہم نہیں کی جاۓ گی بلکہ مستحق افراد ہی رعایتی گندم کے حصول کے لیے اہل ہونگے

گلگت ،ڈپٹی کمشنر استور زید کی ہدایت پر صوبائی حکومت گلگت بلتستان کق گندم سبسڈی میں اصلاحاتی پروگرام کے حوالے سے عوام الناس کو درست معلومات کی فراہمی اور اس حوالے سے راہ ہموار کرنے کی مناسبت سے ضلعی انتظامیہ استور کی عوامی رابطہ مہم جاری ہے. اس سلسلے میں اسسٹنٹ کمشنر شونٹر احسان الحق نے گدئی یونین کے مختلف موضع جات کے سرکردگان کے ساتھ ایک نششت کا اہتمام کیا. نششت میں گاؤں گدئی,چلم سمیت دیگر موضع جات کے عمائدین نے شرکت کی. اس موقع پر اسسٹنٹ کمشنر شونٹر احسان الحق نے کہا کہ صوبائی حکومت گلگت بلتستان نے گندم کی دستیابی کا نظام بہتر بنانے اور رعایتی نرخوں پر مستحق افراد کو گندم کی فراہمی کو یقینی بنانے کے حوالے سے اطلاعات متعارف کراۓ ہیں. جس کے تحت اب صاحب استطاعت لوگ جس سرکاری محکموں میں گریڈ سترہ پر فائز ہیں یا دیگر آئنی عہدوں پر تعینات عہداروں کو اب رعایتی گندم فراہم نہیں کی جاۓ گی بلکہ مستحق افراد ہی رعایتی گندم کے حصول کے لیے اہل ہونگے. جس سے مستحقین کو گندم کی دستیابی کے حوالے سے آسانی پیدا ہوگی. انہوں نے کہا کہ گندم کی قیمت میں بھی ناگزیر حالات کو مدنظر رکھتے ہوۓ صوبائی حکومت نے کچھ اضافہ کرنے کی تجویز دی ہے تاکہ گندم کا موجودہ کوٹہ میں اضافہ کیا جاسکے تاکہ عوام الناس کو کم کوٹے کے حوالے سے جو مشکلات ہیں ان کا خاتمہ ممکن ہو. انہوں نے سرکردگان سے اس حوالے سے عوام الناس کو بہتر رہنمائی میں اپنا کردار ادا کرنے کو گزارش کی. عمائدین علاقہ نے حکومتی اقدامات کے حوالے سے مثبت سوچ قرار دیا ہے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں